پاکستان نے دنیاکو سکھایا کہ دہشتگردی کا مقابلہ کیسےکیا جاتا ہے: صدر مملکت

140 Views

اسلام آباد: صدر مملکت عارف علوی نے کہا ہےکہ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ہزاروں قربانیاں دیں اور دنیاکو سکھایاکہ دہشت گردی کا مقابلہ کیسےکیا جاتا ہے۔

ایوان صدر میں پرچم کشائی کی مرکزی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر مملکت عارف علوی نے کہا کہ قیام پاکستان کے بعد ملک کو بہت سے چیلنجزکا سامنا رہا، پاکستان نے سب سے زیادہ مہاجرین کی میزبانی کی اور آج کوئی ملک سو مہاجرین کو پناہ دینے پر تیار نہیں، پاکستان نے 35 لاکھ افغان مہاجرین کو پناہ دی، ہم نے دل کھول کر افغان مہاجرین کا استقبال کیا، آج بھی پاکستان میں 27لاکھ افغان مہاجرین موجود ہیں، افغان مہاجرین کو پناہ دینا پاکستانی قوم کے کردار کی جیت ہے۔

صدر عارف علوی نے کہا کہ پاکستان نے دنیاکو سکھایاکہ دہشت گردی کا مقابلہ کیسےکیا جاتا ہے، پاکستان نے انتہا پسندی کے خلاف قوموں کو جوڑا، دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ہزاروں قربانیاں دیں۔

صدر مملکت کا کہنا تھا کہ پاکستان نے بھارتی جارحیت کےجواب میں امن کا پیغام دیا، ہم نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ہزاروں قربانیاں دیں، 74 سال میں قوم نے آزمائشوں سے بہت کچھ سیکھا۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے ایک قوم بن کر کورونا کا مقابلہ کیا، کورونا کے باعث دنیا بھر میں لاک ڈاؤن ہوا مگر وزیراعظم نے فیصلہ کیا ہم لاک ڈاؤن نہیں کرسکتے، حکومت نے کورونا کے خلاف کامیاب حکمت عملی اپنائی اور اسمارٹ لاک ڈاؤن پالیسی کو دنیا بھر میں سراہا گیا، دنیا نے کہا ہمیں پاکستان سے سیکھنا چاہیے، کورونا کے باوجود پاکستان کے معاشی اشاریے مثبت سمت گامزن ہیں۔

صدر مملکت کا کہنا تھا کہ بھارت نے 5 اگست 2019 کو مقبوضہ کشمیر پر غیر قانونی قبضہ کیا، مسئلہ کشمیر سلامتی کونسل میں زیر بحث آنا ہماری خارجہ پالیسی کی جیت ہے، مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کی قراردادوں کے تحت حل طلب ہے، ہم اپنے کشمیری بھائیوں کی حمایت جاری رکھیں گے۔

انہوں نے کہا کہ کشمیر پاکستان کا حصہ ہے، نئے نقشے کا اجرا بہت بڑا کام ہے، ہم اپنے کشمیری بھائیوں کو اکیلا نہیں چھوڑ سکتے۔

اسلام آباد: صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے یوم آزادی کے موقع پر سول ایوارڈز کا اعلان کر دیا۔

صدر پاکستان کی جانب سے 24 شخصیات کے لیے ستارہ شجاعت، 27 کے لیے ستارہ امتیاز  جب کہ 44 شخصیات کے لیے صدارتی تمغہ حسن کارکردگی کا اعلان کیا گیا ہے، تمام شخصیات کو ایوارڈز 23 مارچ کو دیے جائیں گے۔

مرحوم صادقین، احمد فراز، ڈاکٹر جمیل جالبی سمیت 6 شخصیات کے لیے نشان امتیاز جب کہ علی بابا کے جیک ما کو ہلال قائد اعظم عطا کیا جائے گا۔

مولانا طارق جمیل کے لیے پرائیڈ آف پرفارمنس، مایہ ناز صوفی گلوکارہ عابدہ پروین کے لیے نشان امتیاز  جب کہ بشریٰ انصاری اور طلعت حسین کے لیے بھی ستارہ امتیاز کا اعلان کیا گیا ہے۔

دوسری جانب فاروق قیصر، نعیم بخاری اور کرکٹر عبدالقادر مرحوم کے لیے بھی ستارہ امتیاز جب کہ سکینہ سموں اور نعمت سرحدی، ہمایوں سعید، علی ظفر اور مہہ جبین قزلباش کے لیے  پرائیڈ آف پرفارمنس کا اعلان کیا گیا ہے۔

Follow news10.pk on Twitter and Facebook to join the conversation

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے