کشمور زیادتی واقعہ: متاثرہ خاتون کے سنسنی خیز انکشافات

210 Views

کراچی سے کشمور لے جا کر زیادتی کا نشانہ بنائی گئی خاتون نے ملزمان کے بارے میں سنسنی خیز انکشافات کیے ہیں۔ 

خاتون کے مطابق نوکری کا جھانسہ دینے والے شخص نے اپنا تعلق سیکیورٹی ادارے سے بتایا اور 40 سے 50 ہزار روپے ماہانہ نوکری کا جھانسہ دے کر جناح اسپتال کراچی سے کشمور لے گیا جہاں اسے اوربچی کو زیادتی کا نشانہ بنایا گیا۔

پولیس کے مطابق خاتون نے زیادتی کی تفصیلات کشمور کے تھانے میں 10 نومبر کو درج کرائی تھیں اور بتایا تھا کہ ملزمان نے 4 سالہ بچی علیشا کو اپنے قبضے میں رکھ کر اسے اس شرط پر رہا کیا کہ وہ کراچی سے ایک خاتون کو بہلا پھسلا کر اپنے ساتھ لائے گی، جس پر اے ایس آئی محمد بخش ابڑو نے اپنی بیٹی سے مدد لی۔

متاثرہ خاتون نے پولیس اہلکار کی تعریف کی تاہم مطالبہ کیا کہ ملزموں کو گرفتار کر کے سخت سزادی جائے۔ 

چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو اور وزیراعلیٰ سندھ نے واقعہ کا نوٹس لے لیا 

دوسری جانب پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری اور وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ  نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے آئی جی سندھ کو ہدایت کی ہے کہ ملزمان کو فوری گرفتار کیا جائے اور متاثرہ بچی اور ماں کا علاج بھی سرکاری خرچ پر کیا جائے۔

علاوہ ازیں خاتون کو کراچی سے کشمور لے جا کر زیادتی کا نشانہ بنانے جانے کے اس واقعے کے خلاف کشمور میں سیاسی اور سماجی تنظیموں کی جانب سے احتجاج کیا گیا۔

Follow news10.pk on Twitter and Facebook to join the conversation

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے